15

پاکستان تحریک انصاف کی رُکن اسمبلی ’’ ملائکہ بخاری ‘‘ رنگے ہاتھوں پکڑی گئیں ۔۔۔ اسلام آباد ہائی کورٹ سے آنے والی خبر نے حکمراں جماعت کے لیے نئی مشکل کھڑی کر دی



اسلام آباد (نیوز ڈیسک) مسلم لیگ (ن)نے اسلام آباد ہائی کورٹ میں پی ٹی آئی کی رکن قومی اسمبلی ملائکہ بخاری کی اہلیت چیلنج کر دی ۔ بدھ کو لیگی ایم این اے بیگم طاہرہ بخاری نے درخواست دائر کی ۔درخواست میں موقف اختیار کیاگیاکہ ملائکہ بخاری نے ریٹرننگ آفیسر کو غلط ،

بیان حلفی جمع کرایا ،ملائکہ بخاری نے اپنی دوہری شہریت کو چھپایا درخواست میں کہاگیاکہ آئین کے آرٹیکل 62 1f کے تحت ملائکہ بخاری صادق اور امین نہیں رہی۔ درخواست میں استدعا کی گئی کہ عدالت ملائکہ بخاری کو نا اہل قرار دے۔درخواست میں الیکشن کمیشن پاکستان، ملائکہ بخاری اور قومی اسمبلی سیکرٹری کو فریق بنایا گیا۔خیال رہے کہ اس سے قبل بھی اسلام آباد ہائی کورٹ نے غلط معلومات فراہم کرنے اور دہری شہریت کی حامل 3 خواتین ارکان اسمبلی کی نااہلی کے لیے درخواست سماعت کے لیے منظور کی تھی، عدالت عالیہ کے جج جسٹس عامر فاروق نے 3 ارکان قومی اسمبلی ملائیکہ بخاری، تاشفین صفدر اور کنول شاہ زیب کے خلاف نااہلی کی درخواست پر سماعت کی۔ اس دوران شہری عبداللہ خان کی جانب سے عدالت عالیہ میں درخواست دائر کی گئی تھی ۔درخواست میں وکیل احمد رضا قصوری کے توسط سے موقف اختیار کیا کہ کاغذات نامزدگی کی آخری تاریخ تک ملائیکہ بخاری دہری شہریت رکھتی تھیں جبکہ تاشفین صفدر نے بھی دہری شہریت ہی کے حوالے سے معلومات خفیہ رکھیں۔ علاوہ ازیں کنول شاہ زیب نے اسلام آباد ہائی کورٹ میں ووٹ تبدیلی سے متعلق غلط بیانی کی، لہٰذا آئین کے آرٹیکل 62، 63 کے تحت ان تینوں ارکان اسمبلی کو نااہل کیا جائے۔اسلام آباد ہائی کورٹ نے پی ٹی آئی کی ارکان قومی اسمبلی کی نااہلی سے متعلق درخواست سماعت کے لیے منظور کرتے ہوئے فریقین کو نوٹس جاری کیے تھے۔



Source link