19

ہوشیارخبردار! چند دنوں میں پاکستان کو ایک ناقابل یقین سرپرائزمل سکتا ہے ۔۔۔۔ عالمی ادارے نے خطرے کی گھنٹی بجادی


نیو یارک (ویب ڈیسک) ورلڈ بینک کی جانب سے جاری رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) سے مذاکرات میں تاخیر سے صورتحال مزید غیر یقینی کا شکار ہوئی ہے۔ورلڈ بینک کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ایکسپورٹ میں معاونت فراہم کرنے والے ادارے ٹی ڈیپ کی

کارکردگی مایوس کن ہے۔ ایکسپورٹرز کو معلومات دینے کے حوالے سے ٹی ڈیپ کا کردار ناکافی ہے۔ورلڈ بینک کی جاری رپورٹ میں پاکستان کے بارے میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کو ٹیکس کا نظام بہتر کرنے، معاشی استحکام کے لیے کاروباری لاگت کم کرنے اور مسابقت بڑھانے کی ضرورت ہے۔عالمی بینک کے مطابق آئندہ مالی سال پاکستان میں مہنگائی کی رفتار مزید تیز ہو جانے کا خدشہ ہے اور یہ 10 فیصد سے تجاوز کر سکتی ہے جس سے غربت بڑھ سکتی ہے۔ دوسری جانب یہ خبر ہے کہ مشیر تجارت عبد الرزاق داؤد کا کہنا ہے کہ وزیر اعظم کی ترجیح کاروبار میں آسانی ہے۔ بہت اہم اصلاحات مکمل کرلی گئی ہیں، نئے طریقہ کار پر کمپنی رجسٹریشن 4 گھنٹے میں ہو رہی ہے۔تفصیلات کے مطابق مشیر تجارت عبد الرزاق داؤد اور چیئرمین سرمایہ کاری بورڈ ہارون شریف نے مشترکہ پریس کانفرنس کی۔ ہارون شریف کا کہنا تھا کہ 15 اپریل کو عالمی بینک کی ٹیم پاکستان کا دورہ کرے گی، مختلف ملکوں کے سرمایہ کار دلچسپی کا اظہار کر رہے ہیں۔ غیر ملکی سرمایہ کاروں کے لیے کاروبار آسان بنا رہے ہیں۔ہارون شریف نے کہا کہ گزشتہ 6 ماہ میں 8 ہزار کمپنیاں رجسٹرڈ ہو چکی ہیں، غیر ملکی کمپنیوں کی رجسٹریشن میں نمایاں اضافہ ہوا ہے۔ کمپنیوں کی جانب سے ادائیگیوں کو آن لائن کردیا ہے۔ ورلڈ بینک کے انڈیکس میں درجہ بندی بہتر کرنے کے اقدامات کر رہے ہیں۔ اراضی کی رجسٹریشن کا عمل بھی آسان بنا رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ تعمیراتی کام کی اجازت کی منظوری کا عمل بھی آسان بنایا ہے۔



Source link