17

اندھیرے کے بعد اجالا: اسد عمر کی صلاحتیں کام کرگئیں ، پاکستانی معیشت کے حوالے سے پوری قوم کو شاندار خوشخبری سنا دی گئی


اسلام آباد(ویب ڈیسک) مشیر تجارت عبد الرزاق داؤد کا کہنا ہے کہ وزیر اعظم کی ترجیح کاروبار میں آسانی ہے۔ بہت اہم اصلاحات مکمل کرلی گئی ہیں، نئے طریقہ کار پر کمپنی رجسٹریشن 4 گھنٹے میں ہو رہی ہے۔تفصیلات کے مطابق مشیر تجارت عبد الرزاق داؤد اور چیئرمین سرمایہ کاری بورڈ ہارون شریف

نے مشترکہ پریس کانفرنس کی۔ ہارون شریف کا کہنا تھا کہ 15 اپریل کو عالمی بینک کی ٹیم پاکستان کا دورہ کرے گی، مختلف ملکوں کے سرمایہ کار دلچسپی کا اظہار کر رہے ہیں۔ غیر ملکی سرمایہ کاروں کے لیے کاروبار آسان بنا رہے ہیں۔ہارون شریف نے کہا کہ گزشتہ 6 ماہ میں 8 ہزار کمپنیاں رجسٹرڈ ہو چکی ہیں، غیر ملکی کمپنیوں کی رجسٹریشن میں نمایاں اضافہ ہوا ہے۔ کمپنیوں کی جانب سے ادائیگیوں کو آن لائن کردیا ہے۔ ورلڈ بینک کے انڈیکس میں درجہ بندی بہتر کرنے کے اقدامات کر رہے ہیں۔ اراضی کی رجسٹریشن کا عمل بھی آسان بنا رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ تعمیراتی کام کی اجازت کی منظوری کا عمل بھی آسان بنایا ہے، ہم ایشیا کی اکانومی کے برابر جگہ بنالیں گے۔ سرمایہ کار ہماری پالیسوں کا خیر مقدم کرتے ہیں۔ بورڈ آف انویسٹمنٹ فوکل یونٹ ہے۔ہارون شریف کا کہنا تھا کہ اسٹینڈرڈ کے لیے پروڈکٹ کے ساتھ سرٹیفکیشن دینی چاہیئے، 8 ہزار کمپنیاں 8 ماہ میں رجسٹرڈ ہوئی ہیں۔ 6 ماہ پہلے بیس لائن دیکھی تو سنہ 47 طرح کی ادائیگیاں تھیں، ویب پورٹل سے اب ادائیگیاں ہونا شروع ہوگئی ہیں۔مشیر تجارت رزاق داؤد کا کہنا تھا کہ وزیر اعظم کی ترجیح کاروبار میں آسانی ہے۔ بہت اہم اصلاحات مکمل کرلی گئی ہیں۔ عالمی بینک کی رپورٹ میں پاکستان کی درجہ بندی بہتر ہوگی۔ چین کے سرمایہ کاروں نے کاروبار میں آسانی پر زور دیا۔ پاکستان میں سوائے چند کمپنیوں کے کسی میں معیار نہیں۔رزاق داؤد کا کہنا تھا کہ نئے طریقہ کار پر کمپنی رجسٹریشن 4 گھنٹے میں ہو رہی ہے۔



Source link