16

وزیر اعظم عباسی کی سعودی فرمانروا شاہ سلمان سے ملاقات

< !DOCTYPE html PUBLIC "-//W3C//DTD HTML 4.0 Transitional//EN" "http://www.w3.org/TR/REC-html40/loose.dtd">



پاکستان کے وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے اپنے سعودی عرب کے دورے میں سعودی فرمانروا شاہ سلمان سے ملاقات کی اور مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا۔

وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سعودی عرب کے دورے پر ہیں جہاں انہوں نے خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز السعود سے ملاقات کی۔ ملاقات میں دوطرفہ تعلقات اور باہمی تعاون سے متعلق امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

وزیر اعظم نے کہا کہ پاکستانی عوام اور حکومت کے لیے سعودی عرب انتہائی اہمیت کا حامل ہے، جبکہ سعودی فرماں روا نے بھی پاکستانی عوام اور حکومت کی تعریف کی۔

دونوں رہنماؤں کی ملاقات فوجی مشقوں ’گلف شیلڈ ون‘ کی اختتامی تقریب کے موقع پر ہوئی۔ ملاقات میں وزیر دفاع خرم دستگیر، آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ، سابق آرمی چیف جنرل راحیل شریف، ڈائریکٹر جنرل آئی ایس آئی لیفٹننٹ جنرل نوید مختار اور اعلیٰ سعودی حکام بھی شریک تھے۔

وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی اور آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ نے سعودی عرب میں جاری 24 ملکی مشترکہ فوجی مشق کی اختتامی تقریب میں شرکت کی۔

تقریب میں اسلامی عسکری اتحاد کی افواج کے سربراہ جنرل (ر) راحیل شریف اور وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کے ساتھ نشست پر بنگلہ دیش کی وزیر اعظم حسینہ واجد بھی موجود تھیں۔

سعودی عرب میں ایک ماہ تک جاری رہنے والی مشقوں کو ’گلف شیلڈ ون‘ کا نام دیا گیا۔ ان مشقوں کو مختلف ممالک کی افواج، ہتھیاروں کے نظام اور پیشہ ورانہ مہم جوئی کے حوالے سے خطے میں سب سے بڑی فوجی مشق سمجھا جاتا ہے۔

پاکستان کی جانب سے اسپیشل سروسز گروپ (ایس ایس جی) کے کمانڈوز، پاک فضائیہ کے سی ون 30 اور جے ایف 17 تھنڈر لڑاکا طیارے مشقوں کا حصہ رہے۔

مشقوں کا مقصد خطے کے ممالک کے مابین فوجی اور سیکیورٹی تعاون کو مستحکم اور روابط کا فروغ تھا۔ اختتامی تقریب میں پاکستانی دستے نے بھی پریڈ میں حصہ لیا۔

پاکستان اور سعودی عرب کے درمیان یمن میں افواج نہ بھجوائے جانے کے معاملہ پر اور قطر کے ساتھ کشیدگی کے حوالے سے غیرجانبدار رہنے پر پاک سعودی تعلقات کشیدہ رہے۔ تاہم، آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے کچھ عرصہ قبل غیر اعلانیہ دورہ سعودی عرب اور تربیتی امور کے لیے مزید افواج بھیجے جانے کے اعلان کے بعد دونوں ممالک کے تعلقات میں بہتری آئی ہے۔



Source link

اپنا تبصرہ بھیجیں