12

پاکستان کی مقبوضہ کشمیر میں عید میلادالنبیﷺ کےاجتماع پرپابندی کی مذمت


اسلام آباد: ترجمان دفتر خارجہ نے مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی فوج کی جانب سے عید میلادالنبیﷺ کے اجتماع پر پابندی کی شدید مذمت کی ہے۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان دفتر خارجہ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ بھارتی فوج نے مقبوضہ وادی میں 12 ربیع الاول کے جلوس نکالنے سےروک دیا، مقبوضہ کشمیر میں عید میلادالنبیﷺ کے موقع پربھارتی حکومت کی پابندیاں قابل مذمت ہیں.

ترجمان نے کہا کہ قابض بھارتی فوج نے مقبوضہ وادی میں مساجدبھی سیل کردیں اورسری نگر میں حضرت بل دربار جانے والےتمام راستے بھی بندکر دئیے۔

بیان میں کہاگیا ہے کہ مقبوضہ وادی میں مذہبی آزاری نہ دینا بنیادی حقوق کی خلاف ورزی ہے، اقوام متحدہ سمیت عالمی برادری مذہبی آزادی نہ ہونے کانوٹس لے۔

یہ بھی پڑھیں:  بابری مسجد کا عدالتی فیصلہ انصاف کے تقاضے پورے کرنے میں ناکام رہا، دفتر خارجہ

ترجمان نے کہا کہ بھارتی حکومت مقبوضہ کشمیر میں فوری طور پرمواصلاتی نظام بحال کرے اورکشمیری نوجوانوں کو اٹھانے کا سلسلہ بند کرے۔

ترجمان دفتر خارجہ کا مزید کہنا تھا کہ بھارت کشمیری عوام کے جذبات کو نہیں دبا سکتا۔

واضح رہے کہ مقبوضہ وادی میں بھارت کی جانب سے پابندیوں، مواصلاتی بلیک آؤٹ اور جبری بندشوں کو 98 روز ہوگئے ہیں ، وادی میں معمولات زندگی مفلوج ہیں اور کھانے پینے کی اشیاء کا ذخیرہ بھی ختم ہورہا ہے ۔

Comments

comments





Source link