13

پشاور میں سود کے کاروبار سے وابستہ شخص کے ساتھ مرنے کے بعد کیا انوکھا واقعہ پیش آ گیا؟ جان کر ہر کوئی کانوں کو ہاتھ لگائے گا


پشاور(ویب ڈیسک) سود کے کاروبار سے وابستہ وفات پانے والے شخص کی نعش کو قبر نے بھی قبول نہیں کیا اور گزشتہ روز سپرد خاک کئے جانے والے شخص کی نعش ایک دن بعد دوبارہ قبر سے باہر آ گئی جس پر قبرستان کے ارد گرد کے رہائش پذیر شہریوں اور قبر کندوں نے


انہیں دوبارہ سپرد خاک کیا ۔خیبر پختونخوا حکومت کی جانب سے بھی سود کے کار وبار سے وابستہ افراد کے خلاف کاروائی کی ہدایات کی جا چکی ہے تاہم یہ کاروائی صرف کاغذی حد تک محدود ہیں صوابی میں گزشتہ روز سود خوروں سے تنگ آکر ایک شخص نے خود کشی کی تھی اندرون شہر واقعہ قبرستان میں گزشتہ روز سود کے کاروبار کرنے والے شخص کو سپرد خاک کردیا گیا تھا اس کی تدفین کے ایک ہی دن بعد اس کی نعش دوبارہ قبر کے اوپر پڑی تھی مقامی شہریوں کے مطابق مذکورہ شخص سود کا کاروبار کرتا تھا جس پر دوبارہ انہیں سپرد خاک کر دیا گیا اور ان کے لواحقین کو بھی آگاہ کردیا گیا دو سال قبل صوبائی دارلحکومت پشاور کے کینٹ کے ایریا میں سود خوروں سے تنگ آکر باپ بیٹے اور بیوی نے خود کشی کی تھی سود خور کی نعش ایک دن بعد قبر سے باہر آنے پر مقامی شہریوں میں شدید خوف وہراس پھیلا ہوا ہے ۔








Source link